Home / پاکستان / حکومت سندھ کی جانب سے کراچی میں ‘ٹرام لائن کی بحالی’ کیلئے نئی کمیٹی کی تشکیل کا نوٹس جاری

حکومت سندھ کی جانب سے کراچی میں ‘ٹرام لائن کی بحالی’ کیلئے نئی کمیٹی کی تشکیل کا نوٹس جاری

حکومت سندھ نے پی اینڈ ڈی بورڈ ، سندھ، کی سربراہی میں کراچی کے اندر ‘ٹرام لائن کی بحالی’ کیلئےنئے ارکان اور نئی شرائط حوالہ کے ساتھ ایک کمیٹی کی تشکیل کا نوٹس دو روز قبل جاری کردیا ھے . کمشنر کراچی اس کمیٹی کے سیکرٹری جبکه ٹرانسپورٹ اینڈ ماس ٹرانزٹ ، لوکل گورنمنٹ، کلچر اینڈ ٹورازم ، کے یو ٹی سی ،کے ڈی اے ، بلدیہ کراچی اور کے این آئی پی ، سندھ ، کے اعلیٰ ترین افسران اس کمیٹی کے ارکان ھونگے

نئی شرائط حوالہ کے مطابق یه کمیٹی شہر قائد میں ‘ٹرام لائن کی بحالی’ کی جامع منصوبہ بندی کریگی تاکه شہر میں سیاحت کو فروغ دیا جائے اور اسکی حوصلہ افزائی کی جائے . کمیٹی ٹرام لائن کیلئے مناسب راستوں اور اسکےمقامات کی نشاندہی کریگی اور دنیا بھر میں جاری ایسے منصوبوں کی مکمل تفصیلات اور قابل عمل پلان پر سیر حاصل بحث کریگی اور اپنی سفارشات جمع کرائے گی اسکے علاوہ مختلف ساجھے داروں کی طرف سے دیگر کئی منصوبوں پر جاری کاموں کے آپریشنز اینڈ مینٹیننس میکنزم کی تشکیل کیلئے حکمت عملی وضع کریگی . یه کمیٹی شہر کے قدیم علاقوں میں واقع پرانی اور تاریخی عمارتوں کی خوبصورتی اور شان و شوکت میں مزید اضافے کیلئے اپنی تجویز بھی دے گی

سٹرک پر بچھی ہوئی ریل ٹرام وے (Tramway) اور ان پر چلنے والی گاڑی ٹرام (Tram) کہلاتی ہیں۔ ٹرام کا آغاز 1776ء میں انگلستان کی کوئلے کی کانوں میں ہوا۔ ایسی گاڑیاں ابتداً گھوڑوں سے کھینچی جاتی تھیں۔ بجلی سے چلنے والی ٹرامین سب سے پہلے امریکا کے شہر نیویارک 1832ء چلیں۔ اس کے بعد انگلستان اور دیگر ممالک میں رائج ہوئیں۔ بھارت کے شہروں بمبئی اور کلکتہ اور پاکستانی شہرکراچی کے مخصوص علاقوں میں عرصے تک چلتی رہی ہیں۔

بیسویں صدی میں یہ ٹرامیں ڈیزل کی قوت سے چلنے لگیں۔ کراچی میں ٹراموے کے نظام کا مرکز صدر میں ایڈولجی ڈنشا ڈسپنسری تھی۔ اس ڈسپنسری سے ٹراموں کے کئی روٹ شروع ہوتے تھے جو گاندھی گارڈن یعنی چڑیا گھر‘ بولٹن مارکیٹ اور کینٹ ریلوے اسٹیشن تک جایا کرتے تھے۔
.اپریل 1975ء کو کراچی کی سڑکوں پر ٹرام آخری مرتبہ چلی اور پھر یہ نظام ہمیشہ کے لیے ختم ہوگیا

About ویب ڈیسک

Avatar

Check Also

کراچی میں دنیا کے سب سے بڑے کتب میلے کے انعقاد کا اعلان

بگ بیڈ وولف بک سیل کی جانب سے دنیا کی سب سے بڑی کتابوں کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے