Home / کھیل / کرکٹ ورلڈ کپ 2019، ایک شاندار فارمیٹ

کرکٹ ورلڈ کپ 2019، ایک شاندار فارمیٹ

12واں کرکٹ ورلڈ کپ شروع ہونے کو ہے ،جیسے جیسے کرکٹ ورلڈکپ کے دن قریب آر ہے ہیں شائقین کرکٹ میں جو ش وخروش بڑھتا جا رہاہے،کچھ ٹیمیں پریکٹس میچز کھیل چکی ہیںاور کچھ کے جاری ہیںجبکہ کچھ میچز میں بارش ہونے کی وجہ سے ٹیمو ں کو پریکٹس کا موقع نہ مل سکا ۔ 30مئی سے آغاز ہونے والے ورلڈ کپ میں دنیا کی 10بہترین ٹیمیں حصہ لے رہی ہیں، ہر ٹیم کو دوسری ٹیم کے ساتھ میچ کھیلنا ہے۔ یہ فارمیٹ آخری بار 1992کے ورلڈ کپ میں استعمال کیا گیا تھا۔1992سے اب تک،27سال بعد یہ پہلاموقع ہوگا کہ تمام ٹیموں کو دوسری ٹیم کے ساتھ میچ کھیلنا ہو گا۔ اس سے پہلے 1996سے 2015تک گروپ اسٹیج میچز کھیلے جاتے تھے جن میں مضبوط ٹیموں کو ایک اپ سیٹ شکست کے بعد باہر ہوتا دیکھاگیا ہے، اور ایک کمزور ٹیم کو اگلے رائونڈ میں رسائی حاصل ہوئی۔جیسے 2003کے ورلڈ کپ میں کینیا جیسی ایک کمزور ٹیم سیمی فائنل میں پہنچ گئی تھی،اسی طرح 2007کے ورلڈ کپ میں آئرلینڈ نے پاکستان کوہر ا کر ٹورنامنٹ سے باہر کر دیا تھا،جب کہ اس ورلڈ کپ میں پاکستان نے فیورٹ کی حیثیت سے شرکت کی تھی۔

ورلڈ کپ کی یہی خوبصورتی ہے کہ تمام اچھی ٹیموں سے میچ جیت کر سیمی فائنل تک رسائی حاصل کی جائے اور پھر فائنل میں ۔اس ورلڈ کپ میں دویا تین نہیں بلکہ کم سے کم 6سے 7میچز اچھے کھیلنا ہوں گے تب جا کر سیمی فائنل کی نشست حاصل ہو سکے گی۔ ورلڈ کپ فارمیٹ میںسب سے زیادہ فائدہ بنگلہ دیش اور افغانستان کو ہوگا جو ہر مضبوط ٹیم کے ساتھ کھیل کر اپنے جوہر دکھا سکیں گی اور اپنے کھیل میں مزید نکھا ر لا سکیں گی۔یہ پہلا موقع ہو گا کہ جب دونوں ٹیمیں ورلڈ کپ میں تمام مضبوط ٹیمو ں کے ساتھ میچ کھیلیں گی۔اس فارمیٹ کے تحت ورلڈکپ میں سیمی فائنل کے لیے پاکستان کے ساتھ انڈیا انگلینڈ اور آسٹریلیا کی ٹیمیںفیورٹ سمجھی جارہی ہے، مگر یہ سب اندازے ہیں ،جو بھی ٹیم اپنے پریشر پر قابو پائے گی وہی ٹیم ورلڈ کپ جیتنے کی اہل ہو گی۔

نبیل احمد

About ویب ڈیسک

Avatar

Check Also

کرکٹ ورلڈ کپ2019 پر ایک نظر

انگلینڈ نے ورلڈ کپ کے فائنل میں ایک دلچسپ مقابلے کے بعد اعصاب شکن میچ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے